February 12, 2020 at 8:42 pm

حکومتی ذرائع کے مطابق پاکستان اورآئی ایم ایف کےدرمیان مذاکرات مکمل ہو گئے ہیں۔

مذاکرات کی سربراہی مشیرخزانہ اورمشن برائےپاکستان کےچیف نے کی۔

پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان اتفاق ہوا ہے کہ منی بجٹ نہیں آئےگا،

جون تک ٹیکسزمیں اضافہ نہیں ہوگا،ٹیکس ہدف کم نہیں ہوگا،

ذرائع کے مطابق مذاکرات میں اتفاق ہوا ہے کہ ٹیکس اہداف کےحصول میں کوششیں کی جائیں گی،

وزارت خزانہ کی آمدن بڑھانے کے لئے نان ٹیکس آمدن بڑھائی جائےگی۔پاکستان آئی ایم ایف اتفاق نجکاری کےروڈمیپ پرعملدرآمدیقینی بنایاجائےگا،

نان ٹیکس آمدن میں 400 ارب روپےاضافہ کیاجائےگا اورسیلزٹیکس کاریٹ 18فیصدنہیں ہوگا ،سیکز ٹیکس کی شرح سترہ فیصد ہی رہے گی۔

ذرائع کے مطابق پاکستان نےآئی ایم ایف کےبیشتر حاصل کرلیےہیں ،آئی ایم ایف مالیاتی اورکرنٹ اکاؤنٹ خسارےپرمطمئن ہے۔فریقین دس روزہ مذاکرات کاالگ الگ اعلامیہ جاری کریں گے۔

Facebook Comments