March 9, 2020 at 2:36 pm

انٹرنیٹ پر ڈرامے کی تلاش سکڑوں میل گاڑی چلانے سے زیادہ آلودگی پیدا کرتی ہے۔

انٹرنیٹ کا استعمال ماحولیاتی آلودگی میں اضافے کا سبب ہے۔
اگر آپ اس سوچ کے ساتھ انٹرنیٹ استعمال کر رہے ہیں کہ گاڑی پر باہر جا کر آلودگی پھیلانے سے گھر رہ کر انٹرنیٹ استعمال کرنا بہتر ہے تو آپ غلط سوچ رہے ہیں۔
بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق انٹرنیٹ کا استعمال ماحول کے لیے بہت خطرناک ہے۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اگر آپ نیٹ فلکس پر اپنا پسندیدہ ڈرامے کی تلاش کر رہے ہیں تو آپ برمینگم سے مانچسٹر کے سفر کے دوران گاڑی کی پیدا کی گئی آلودگی سے زیادہ آلودگی پیدا کرتے ہیں۔
رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اگر یوٹیوب پر ایک ویڈیو کو 6 کروڑ لوگ دیکھتے ہیں تو اس سے اتنی آلودگی پھیلے گی جتنی 5 افریقی ممالک پورے سال میں پھیلاتے ہیں۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ آن لائن سرفنگ اور سرچنگ سے کاربن پیدا ہوتی ہے جو ماحول کے بہت خطرناک ہے۔ تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ جب ہم کوئی چیز انٹرنیٹ پر تلاش کرتے ہیں تو لاکھوں میل لمبی انٹرنیٹ کیبلز استعمال ہوتی ہیں جن میں ڈیٹا سفر کر کے ہمارے تک پہنچتا ہے۔
ڈیٹا سینڈ کرنے میں جو انرجی استعمال ہوتی ہے اس سے کاربن پیدا ہوتا ہے جو ماحول کے لیے انتہائی نقصان دہ ہے۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے گوگل اور ایمازون جیسی بڑی کمپنیاں ماحولیاتی آلودگی کا سبب ہیں۔ رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے دنیا کی آدھی سے زیادہ آبادی انٹرنیٹ کا استعمال کر رہی ہے جو ماحولیاتی آلودگی کا سبب ہے۔

Facebook Comments